26-01-2017

پشاور ہائی کور ٹ نے افغانستان پھل اور سبزیاں درآمد اور برآمد کرنے والے تاجروں کو بنک کے ذریعے رقم کی ترسیل سے مستثنی قرار دینے کے لئے دائر رٹ پر وفاق سے جواب طلب کر لیا ہے ۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس اکرام اللہ خان پر مشتمل دو رکنی بنچ نے نجی ٹریڈرز کی جانب سے جاری دائر رٹ درخواست کی سماعت کی جس میں عدالت کو بتایا گیا کہ درخواست گزار پاکستان اور افغانستان سبزیاں برآمد کرتے ہیں جبکہ افغانستان سے اسی رقم پر پھل وغیرہ لے کر آتے ہیں تاہم سٹیٹ بنک پاکستان کی نئی پالیسی کے مطابق افغانستان درآمد ات او ر برآمدات کےلئے الیکٹرانک امپورٹ فارم داخل کرنا لازم قرار دیا ہے ۔جبکہ دوسری جانب بنک کے ذریعے رقم کی ترسیل کا طریقہ کار آسان نہیں ہے اور اس میں طویل وقت ضائع ہوتا ہے اور رقم بھیجنے میں تاخیر پر پھل اور سبزیاں خراب ہو سکتی ہے لہذا درخواست گزاروں کو بنک کے ذریعے رقم بھجوانے سے مستثنی قرار دیا جائے ۔