21-06-2017

پشاور ہائی کورٹ نے لیڈی ریڈنگ ہسپتال پشاور کے شعبہ نیوروسرجری ، یورالوجی اور جنرل سرجری کے لئے اسسٹنٹ پروفیسرز کی تقرری روک دی اور چیئرمین بورڈ آف گورنرز اور ڈین ایل آر ایچ کو نوٹس جاری کرکے جواب طلب کرلیا ہے ۔

جسٹس سید افسر شاہ اورجسٹس یونس تہیم پر مشتمل دو رکنی بنچ نے دائر رٹ درخواستوں کی سماعت کی جس میں موقف اپنایا گیا کہ ایم ٹی آئی ایل آر ایچ میں مختلف شعبوں کے لئے اسسٹنٹ پروفیسرز کی پوسٹیں مشتہر کی گئیں تاہم اس حوالے سے جو طریقہ کار اور انٹرویو کمیٹی بنائی گئی ہے وہ غیر قانونی ہے جس پر درخواست گزاروں نے اعتراض بھی کیا تاہم اس کے باوجود اس کمیٹی نے انٹرویو کئے ہیں جو کہ غیر قانونی ہے لہذا اس کو کالعدم قرار دیا جائے ۔

فاضل عدالت نے ابتدائی دلائل کے بعد اس حوالے سے حتمی نوٹی فیکیشن کا اجراء روک دیا اور متعلقہ حکام سے جواب طلب کر لیا۔