01-08-2017

پشاورہائی کورٹ نے ایٹا ٹیسٹ پاس کرنے والے پولیس اہلکاروں کو ہیڈ کانسٹیبل کی پوسٹ پر ترقی نہ دینے پر ایٹا اور محکمہ پولیس کو نوٹس جاری کرکے جواب طلب کرلیا ہے ۔

جسٹس روح الاآمین خان اورجسٹس اعجاز انور پر مشتمل دو رکنی بنچ نے دو پولیس اہلکاروں کی جانب سے دائر رٹ درخواست کی سماعت کی جس میں عدالت کوبتایا گیا کہ درخواست گزار محکمہ پولیس میں کانسٹیبل تعینات ہیں اور انہوں  نے ہیڈکانسٹیبل کی پوسٹ کےلئے ایٹا ٹیسٹ مئی دو ہزار سترہ میں دیا تھا اور ٹیسٹ پاس کرنے کے بعد انہیں ہنگو ٹریننگ سنٹر بھجوایا گیا تاہم تربیت کے پچیس روز بعد درخواست گزاروں کو کہا گیا کہ انہوں نے ایٹا ٹیسٹ میں اپنی جگہ کسی دوسرے کو بٹھائے تھے اور انہیں ملازمت سے معطل کر دیا گیا ۔

عدالت میں موقف اپنایا گیا کہ امتحان ایٹا نے منعقد کیا تھا جس سے محکمہ پولیس کا کوئی تعلق نہیں جبکہ خود ایٹا یہ کہہ چکی ہے کہ درخواست گزار امتحان میں خود بیٹھے تھے  اس لئے فاضل عدالت سے استدعا ہے کہ محکمہ پولیس کی جانب سے انہیں بطور ہیڈ کانسٹیبل پوسٹ سے ہٹانے کے اقدام کو کالعدم قرار دیا جائے ۔