15-11-2017

پشاور ہائی کورٹ نے ایڈوکیٹ جنرل خیبر پختونخوا کی تنخواہ اور مراعات  میں اضافے کے خلاف دائر رٹ پر صوبائی حکومت کو نوٹس جاری کرکےجواب طلب کرلیا ہے۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس اعجاز انور پر مشتمل دو رکنی بنچ نے خورشید خان ایڈوکیٹ کی جانب سے دائر رٹ پٹیشن کی سماعت کی جس میں عدالت کو بتایا گیا کہ صوبائی حکومت نے حال ہی میں ایڈوکیٹ جنرل خیبر پختونخوا کی تنخواہ اور مراعات میں کئی گنا اضافہ کیا ہے جبکہ گزشتہ سالوں کی تنخواہ اور مراعات میں بھی اضافہ کیا گیا ہے اس طرح ایک غریب صوبے پر اضافی بوجھ ڈال دیا گیا ہے لہذا ایڈوکیٹ جنرل کی تنخواہ اور مراعات میں اضافہ کالعدم قرار دیا جائے۔