29-09-2017

پشاور ہائی کورٹ نے ایڈوکیٹ جنرل خیبر پختونخوا کی مراعات کو ہائی کورٹ جج کے برابر لانے کے اعلامیہ پر سیکرٹری فنانس ، سیکرٹری قانون اور ایڈوکیٹ جنرل خیبر پختونخوا کو نوٹس جاری کرکے وضاحت طلب کرلی ۔

  فاضل دو رکنی بنچ نے درخواست گزار خورشد خان ایڈوکیٹ کی جانب سے دائر رٹ درخواست کی جس میں عدالت کو بتایا گیا کہ صوبائی حکومت مالی بحران سے نجات کےلئے اخراجات میں کمی لانے کےلئے مختلف اقدامات کر رہی ہے جن میں نئی بھرتیوں، نئی گاڑیوں کی خریداری پر پابندی وغیرہ شامل ہیں لیکن حکومت نے ایڈوکیٹ جنرل کی مراعات میں نے تحاشہ اضافہ کرکے ہائی کورٹ کے جج کے برابر تنخواہ مقرر کیا گیا ہے ۔جو کہ انصاف کے تقاضوں کے منافی ہے اسلئے فاضل عدالت سے استدعا ہے کہ حکومت کے اس اقدام کو کالعدم قرار دیا جائے ۔