26-10-2017

پشاور ہائی کورٹ نے عدالتی احکامات کے باوجود پبلک ہیلتھ باجوڑ ایجنسی کے شہید انجینئر کے اہل خانہ کو شہید پیکج نہ دینے پر سیکرٹری فنانس فاٹا کے قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر دیئے ہیں۔

جسٹس وقار احمد سیٹھ اور جسٹس غضنفر پر مشتمل دو رکنی بنچ نے درخواست گزارہ گل شاد بی بی کی جانب سے دائر توہین عدالت درخواست کی سماعت کی جس میں عدالت کوبتایا گیا کہ درخواست گزارہ کا شوہر خان پراچہ باجوڑ ایجنسی میں پبلک ہیلتھ میں بطور انجینئر تعینات تھا اور ڈیوٹی کے دوران جام شہادت نوش کیا جس کےلئے حکومت نے شہید پیکج کی منظوری دی اور عدالتی احکامات کے باوجود انہیں تاحال شہید پیکج نہیں دیا جا رہا جو توہین عدالت کے زمرے میں آتا ہے لہذا متعلقہ حکام کے خلاف توہین عدالت کی کاروائی عمل میں لائی جائے اور درخواست گزارہ کو شہید پیکج ادا کرنے کا حکم دیا جائے۔