04-06-2018

سپریم کورٹ نے تحفظ حقوق اطفال سے متعلق وفاقی حکومت سے جواب طلب کر لیا ہے۔ عدالت کا کہنا ہے کہ بچوں کے تحفظ سے متعلق پہلے سے موجود قانون کا نوٹیفیکشن دوبارہ کیا جائے جبکہ اسلام آباد ہائی کورٹ طیبہ تشدد کیس کے ملزمان کی اپیلوں پر ایک ہفتے میں فیصلہ کرے۔

چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں  ثاقب نثار کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے تین رکنی بنچ نے طیبہ تشدد کیس کی سماعت کی۔ ایڈووکیٹ جنرل اسلام آباد سے نے بتایا کہ مقدمہ کے ملزمان کو سزائیں ہو چکی ہیں، جن کے خلاف ملزمان کی اپیلیں زیر التوء ہیں۔

عدالت نے تحفظ حقوق اطفال پر وفاقی حکومت سے جواب جواب طلب کرتے ہوئے اس حوالے سے پہلے سے موجود قانون کا دوبارہ نوٹیفیکشن کرنے کی ہدایت کی ہے۔