08-05-2017

پشاور ہائی کورٹ نے دوہزار بارہ کے بعد نئے حج ٹور آپریٹرز کی رجسٹریشن سے  متعلق پالیسی جاری نہ کرنے پر وفاقی حکومت کو نوٹس جاری کرکے جواب طلب کر لیا ہے ۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس روح الاامین خان پر مشتمل د ورکنی بنچ نے نجی حج ٹور آپریٹر کمپنی کی جانب سے دائر رٹ پٹیشن کی سماعت کی جس میں عدالت کوبتایاگیا کہ وفاقی وزارت حج و اوقاف اور مذہبی امور دو ہزار بارہ تک نجی ٹور آپریٹر ز کی سالانہ رجسٹریشن کرتے تھے جبکہ حج کوٹہ کےلئے باقاعدہ اشتہارات بھی دیتے تھے تاہم دو ہزار بارہ کے بعد سے وفاقی وزارت حج و مذہبی امور نے حج آپریٹرز انرولمنٹ کے مطابق پالیسی جاری نہیں کی ہے ۔

فاضل عدالت نے ابتدائی دلائل کے بعد متعلقہ حکام کو نوٹس جاری کرکے جواب طلب کر لیا۔