07-06-2017

سپریم کورٹ نے حج کوٹہ پالیسی کے فیصلے کے خلاف پرائیویٹ ٹور آپریٹرز کی درخواستیں نمٹاتے ہوئے وزارت مذہبی امور کو دو ہزار تیرہ کے عدالتی فیصلے میں وضع کردہ طریقہ کار کے مطابق معیار پر پورا اترنے والے نئے ٹور آپریٹرز کو کوٹہ الاٹ کرنے کے احکامات جاری کردیئے ہیں ۔

جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے پانچ رکنی  لارجر بنچ نے ایک مختصر فیصلے کے ذریعے سرکاری اسیکم کے تحت ساٹھ اور پرائیویٹ سکیم کے چالیس فیصد کے تناسب سے کوٹہ الاٹ کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے قرار دیا کہ حج کوٹہ کے بارے میں دو ہزار تیرہ کے عدالتی فیصلے پر عمل ہونا چاہیئے تھا لیکن وزارت مذہبی امور کی طرف سے فیصلے پر عمل درآمد نہ کرنا سمجھ سے بالاتر ہے ۔