03-05-2018

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ  جسٹس یحیی آفریدی نے عوامی مفاد میں  فوری طورپر صوبے کے مختلف اضلاع میں تعینات 10 جوڈیشل افسران کے تبادلوں وتعیناتیوں کے احکامات جاری کر دیئے ہیں ۔

رجسٹرار پشاور ہائی کورٹ کی جانب سے جاری ہونے والے اعلامیہ کے مطابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج / جج خصوصی ٹاسک پشاورمسز زرقیش ثانی کو تبدیل کرکے ان کوبحیثیت پریذائڈنگ آفیسر لیبر کورٹ پشاورتعینات کردیاگیاہے ۔اسی طرح ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج / افسر بکار خاص پشاورہائی کورٹ پشاورشفیق احمد تنولی کی بحیثیت پریذائڈنگ آفیسر لیبر کورٹ ہری پور،ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج / پریذائڈنگ آفیسر لیبر کورٹ مردان محمد جمال کی بحیثیت پریذائڈنگ آفیسر لیبر کورٹ ڈی آئی خان ،ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج / پریذائڈنگ آفیسر لیبر کورٹ ہری پور محمد حسین کی بحیثیت پریذائڈنگ آفیسر لیبر کورٹ مردان ، صوبائی حکومت سے واپسی پر ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج / پریذائڈنگ آفیسر لیبر کورٹ ڈی آئی خان لیاقت علی خان مروت کی بحیثیت ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج دیر بالاجبکہ ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج اپردیرمحمد ظفر کی بحیثیت افسر بکار خاص پشاورہائی کورٹ پشاور،ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کوہستان عامر نذیر بھٹی کی بحیثیت افسر بکار خاص پشاورہائی کورٹ پشاور،صوبائی حکومت سے واپسی پرڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج / پریذائڈنگ آفیسر لیبر کورٹ پشاورمحمد ارشدکی بحیثیت ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کوہستان ،ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج لکی مروت صفی اللہ جان کی بحیثیت سینئر ڈائریکٹر(ایڈمنسٹریشن )خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی پشاور، ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج / سینئر ڈائریکٹر ایڈمنسٹریشن خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی پشاورضیا الرحمان کی بحیثیت ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج لکی مروت تعیناتی کے احکامات جاری کیے گئے ہیں۔