02-02-2017

سپریم کورٹ  نے بعض سرکاری و غیر سرکاری  ہسپتالوں میں دل کے مریضوں کو مہنگے ، غیر معیاری اور جعلی سٹنٹ لگانے سے متعلق از خود نوٹس کیس کی سماعت کے دوران وزارت قومی صحت اور ڈرگ  ریگولیٹری اتھارٹی پاکستان سے معیاری سٹنٹ  کی درآمد ، رجسٹریشن اور اس کی مناسب قیمت کے تعین کرنے کے حوالے سے ایک ہفتے میں جامع رپورٹ طلب کر لی اور کیس کی مزید سماعت  دس دن کےلئے ملتوی کر دی ۔

چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار  کی سربراہی میں جسٹس عمر عطاء بندیال اور جسٹس مقبول باقر پر مشتمل سپریم کورٹ کے تین رکنی بنچ نے از خود نوٹس کیس کی سماعت کی ۔

ن دوران سماعت چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار  نے ریمارکس دیئے  کہ دل کے مریضوں کو معیاری اسٹنٹ اور ادویات نہ ملنے سے زیادہ سنگدلانہ عمل کوئی نہیں۔ معاملہ انتہائی اہم ہے اسے پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے۔