02-08-2017

ایف آئی اے نے چوہدری شوگر ملز کے تحقیقاتی ریکارڈ میں ٹیمپرنگ کیس میں سابق چیرمین ایس ای سی پی  ظفرحجازی کی ضمانت درخواست پر فیصلہ سات اگست تک محفوظ کر لیا ہے

ڈیوٹی جج اسلام آباد ارم نیازی کی عدالت میں ظفر حجازی کی درخواست ضمانت پر سماعت ہوئی۔ اس موقع پر ایف آئی اے نے ظفرحجازی کے کمپیوٹر سے حاصل کی گئی تفصیلات عدالت میں پیش کرتے ہوئے موقف اختیارکیا کہ سپریم کورٹ کے احکامات پرعمل کرتے ہوئے ایف آئی آر درج ہوئی ہے، شواہد کے مطابق ظفر حجازی براہ راست ٹیمپرنگ میں ملوث ہےلہذا ملزم ظفرحجازی  کی درخواست ضمانت منسوخ کی جائے۔

ملزم ظفر حجازی کے وکیل نے عدالت میں موقف اختیار کیا کہ ظفر حجازی چوہدری شوگر مل ریکارڈ ٹمپرنگ میں ملوث نہیں جبکہ ایس ای سی پی کے جو افسران ملوث ہیں ان کو شامل تفتیش ہی نہیں کیا گیا، ظفر حجازی کو دل اور گردے سمیت کئی بیماریاں لاحق ہیں لہذا ضمانت منظور کی جائے۔عدالت نے ظفر حجازی کی ضمانت کی درخواست پر فیصلہ 7 اگست تک محفوظ کردیا۔