07-07-2017

پشاور ہائی کورٹ نے سانحہ آرمی پبلک سکول کےلئے جوڈیشل کمیشن کی تشکیل کےلئے دائر رٹ درخواست اگلی  تک ملتوی کردی ہے ۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس عبد الشکور پر مشتمل دو رکنی بنچ نے آرمی پبلک سکول پشاور کے شہداء طلباء کے والدین کی جانب سے دائردو الگ الگ رٹ درخواستوں کی سماعت کی ۔جس میں موقف اپنایاگیا کہ آرمی پبلک سکول پر دہشت گردانہ حملے میں ایک سو انچاس طلباء جاں بحق ہوئے تاہم ان طلباء کے والدین کو آج تک سکول پر حملے کے عوامل سے آگاہ نہیں کیا گیا جبکہ مدعی ہونے کے ناطے ان کی جانب سے ایف آئی آر کا اندراج ہونا چاہیئے تھا جو کہ نہیں ہوسکا لہذا درخواست گزار کو اپنا بیان ریکارڈ  کرنے کی اجازت دی جائے تاکہ ان کی جانب سے علیحدہ ایف آئی آر درج کی جا سکے ۔ دوسرے رٹ درخواست میں عدالت سے استدعا کی گئی کہ سانحہ آرمی پبلک سکول پشاور کے حقائق سامنے لانے کےلئے جوڈیشل کمیشن تشکیل دیا جائے ۔

عدالت نے درخواست گزار کے وکیل کے ملک سے باہر ہونے کی بناء پر سماعت ملتوی کردی ۔