25-09-2017

سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ عام کرنے سے متعلق پنجاب حکومت کی انٹرا کورٹ اپیل پر سماعت کے لیے نیا فل بینچ تشکیل دے دیا گیا ہے۔

لاہور ہائی کورٹ کے سنگل بینچ نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ عام کرنے کا حکم دیا تھا جس پر پنجاب حکومت کی جانب سے انٹرا کورٹ اپیل دائر کی گئی  ہے۔لاہو رہائیکورٹ کے 3 رکنی فل بینچ نے قائم مقام چیف جسٹس کی سربراہی میں پنجاب حکومت کی اپیل پر سماعت کرنی تھی، فل بینچ کے دیگر ممبران میں جسٹس عبدالسمیع خان اور جسٹس انوارالحق شامل تھے۔ تاہم لاہور ہائی کورٹ کے قائم مقام چیف جسٹس یاور علی نے اپیل کی سماعت سے انکار کردیا تھا جس کے بعد کیس کی سماعت کے لیے قائم تین رکنی فل بینچ ٹوٹ گیا۔

چھٹیوں پر گئے چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ جسٹس منصور علی شاہ کو یہ معاملہ بھجوایا گیا جس پر اب نیا بینچ تشکیل دے دیا گیا ہے۔ نیا تین رکنی فل بینچ جسٹس عابد عزیز شیخ کی سربراہی میں تشکیل دیا گیا ہے جس میں جسٹس امین الدین خان اور جسٹس شہباز رضوی بھی شامل ہیں۔