19-05-2018

سپریم کورٹ نے اربوں روپے کے قرضہ معافی کیس میں222 کمپنیوں اور متعلقہ بینکوں کے صدورکو نوٹس جاری کرتے ہوئے تحریری جواب طلب کرلیے جبکہ کیس کی سماعت 8 جون کو مقررکرکے تمام بینکوں اورکمپنیوں کے سربراہان کو ذاتی حیثیت میں طلب کرلیا گیا ہے۔

واضح رہے ہ جسٹس ریٹائرڈ جمشیدپر مشتمل کمیشن نے خلاف ضابطہ قرضہ معاف کرانے والی222 کمپنیوں کیخلاف مزیدکارروائی کی سفارش کی تھی، ان 222کمپنیوں نے 35 ارب سے زائدکے بنک قرضے معاف کرائے تھے۔