04-10-2017

سپریم کورٹ نے پی ٹی آئی کے رہنما  جہانگیر ترین نااہلی کیس کی سماعت  کل تک ملتوی کردیا ہے۔

چیف جسٹس پاکستان جسٹس ثاقب نثار  کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے لاجر بنچ نے دائر درخواست کی سماعت کی ۔ چیف جسٹس پاکستان نے ریمارکس دیئے کہ  پارلیمنٹ ایک خود مختار ادارہ ہے اس پر تلوار نہیں لٹکنا چاہیے۔دوران سماعت جہانگیر ترین کے وکیل  نے دلائل دیئے ۔جہانگیر ترین کے وکیل کے دلائل پر جسٹس فیصل عرب نے ریمارکس دیئے کہ قرض معافی کا معاملہ قرض ڈیفالٹ کے زمرے میں آتا ہے۔جہانگیر ترین کے وکیل نے کہا کہ جہانگیرترین ضمنی الیکشن میں رکن اسمبلی منتخب ہوئے، ان کے 2015 کے کاغذات نامزدگی کسی نے چیلنج نہیں کیے، 2013 کے کاغذات نامزدگی پرضمنی الیکشن کی رکنیت ختم نہیں کی جاسکتی۔