03-08-2017

سپریم کورٹ نے سابق وزیر اعظم نواز شریف اور ان کے بچوں کے خلاف احتساب عدالتوں میں زیر سماعت آنے والے مقدمات کی نگرانی کے لیے جسٹس اعجاز الاحسن کو نگراں جج مقرر کیا ہے۔ رجسٹرار آفس سپریم کورٹ  نے نوٹیفکیشن جاری کر دیا ہے۔

جسٹس اعجاز الاحسن سپریم کورٹ کے اس پانچ رکنی بینچ کا حصہ تھے جنھوں نے 28جولائی کو پاناما سکینڈل میں وزیر اعظم نواز شریف کو نااہل قرار دینے کے ساتھ ساتھ اُن کے اور اُن کے بچوں کے خلاف بیرون ممالک اثاثے بنانے کے الزام میں احتساب عدالتوں میں تین ریفرنس دائر کرنے کا حکم دیا تھا۔

دوسری طرف سپریم کورٹ کے فیصلے کی روشنی میں قومی احتساب بیورو نے سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف اور ان کے خاندان کے علاوہ اسحاق ڈار کے خلاف بھی راولپنڈی اور اسلام آباد کی احتساب عدالتوں میں ریفرنس دائر کرنے کی منظوری دے دی ہے۔

 واضح رہے کہ احتساب عدالت کو ریفرنس دائر ہونے کے بعد چھ ماہ میں ان ریفرنس میں فیصلہ کرنے کا حکم دیا گیا ہے۔