31-03-2018
خیبر پختونخوا وقار نسواں کمیشن نے شناختی کارڈ سے محروم خواتین کیلئے خصوصی مہم کا آغاز کر دیا ہے ۔ابتدائی طور پر صوبے کے چار اضلاع پشاور، چارسدہ، ڈیرہ اسماعیل خان اور دیر لوئر میں خواتین کیلئے کمپیوٹرائزڈ شناختی کارڈز بنوائے جائیں گے جبکہ دوسرے مرحلے میں دیگر اضلاع کی خواتین کو بھی قومی شناختی کارڈ کا حامل بنایا جائے گا۔
خیبر پختونخوا وقار نسواں کمیشن کے مطابق حال ہی میں تجویز کی گئیں کمیشن کی ضلعی کمیٹیوں کی مدد سے صوبے کے چار اضلاع پشاور، چارسدہ ، ڈیرہ اسماعیل خان اور دیر لوئر میں ایک سروے کیا گیا جس میں 7ہزار سے زائد ایسی خواتین کی نشاندہی کی گئی جو آج بھی کمپیوٹرائزڈ شناختی کارڈ سے محروم ہیں ان خواتین کو کمپیوٹرائزڈ شناختی کارڈ فراہم کرنے کیلئے کمیشن نے نادرا حکام سے رابطہ کیا اور متعلقہ اضلاع کے ناظمین کی حمایت کے ساتھ شناختی کارڈ بنانے کی مہم کا آغاز کر دیا گیاہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔