07-06-2017

پشاور ہائی کورٹ نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کے دوران شہید ہونے والے وکلاء کے لئے خصوصی شہدا پیکج کےلئے دائر رٹ درخواست پر صوبائی حکومت سے ایک ماہ کے اندر جواب طلب کر لیا ہے ۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس محمد غضنفر خان پر مشتمل دو رکنی بن بنچ نے پشاور ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کی جانب سے دائر رٹ درخواست کی سماعت کی ۔

دائر رٹ میں موقف اپنایا گیا کہ گزشتہ کئی سالوں سے دہشت گردی کے بڑھتے ہوئے واقعات میں وکلاء بڑی تعداد میں شہید ہوئے ہیں اور ان کی شہادت کے بعد متاثرہ خاندان شدید مالی بحران سے دو چار ہیں جبکہ حکومت عام حالات میں جو پیکج دیتی ہے وہ انتہائی کم ہے اور لواحقین کو شدید معاشی مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے اس لئے ان شہید وکلاے کےلئے خصوصی شہداء پیکج دیاجائے جس طرح کے قانون نافذ کرنے والے اداروں کے اہلکاروں کے لئے یہ پیکج دیا جا رہا ہے ۔