13-10-2017

پشاور ہائی کورٹ نے صوبائی ادارہ برائے تعمیر نو بحالی و آبادکاری  پارسا سے نکالے گئے چھ ملازمین کو دوبارہ بحال کر دیا ہے ۔

دائر رٹ درخواست میں موقف اپنایا گیا کہ صوبائی حکومت نے ادارہ برائے تعمیر نو بحالی و آبادکاری کے قیام کی سمری کی نومبر دو ہزار سولہ میں منظوری دی جس کے بعد ادارے نے غیر قانونی طور پر جنوری میں چوبیس ملازمین کو بغیر نوٹس فارغ کر دیا جبکہ جولائی میں مزید دس ملازمین کو نوکری سے فارغ کر دیا جس میں درخواست گزار بھی شامل ہیں حالانکہ ان ملازمین کی خدمات کی تعریف بھی کی گئی اور بہترین خدمات پر انہیں ایوارڈز اور توصیفی اسناد بھی دی گئیں لہذا فاضل عدالت سے استدعا کہ درخواست گزاروں کی برطرفی کالعدم قرار دی جائے اور انہیں بحال کیا جائے ۔