16-03-2017

پشاور ہائی کورٹ نے خیبر پختنونخوا حکومت کی جانب سے بٹگرام کے رکن صوبائی اسمبلی ولی محمد خان کے حلقے کے ترقیاتی فنڈز ضلع ناظم بٹگرام کو منتقل کرنے کے خلاف دائر رٹ پر ایڈوکیٹ جنرل خیبر پختونخوا کو اکیس مارچ کو طلب کر لیاہے۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس اکرام اللہ خان پر مشتمل دو رکنی بنچ نےرکن صوبائی اسمبلی کی جانب سے دائر رٹ درخواست کی سماعت کی جس میں عدالت کو بتایا گیا کہ سالانہ ترقیاتی پروگرام دو ہزار سولہ سترہ میں حلقہ پی کے انسٹھ  تحصیل بٹگرام کےلئے سڑکوں کی تعمیر کی منظوری دی گئی تھی تاہم درخواست گزار کا فنڈ ضلع ناظم بٹگرام کو منتقل کر دیا گیا اور اے ڈی پی میں بھی ردوبدل کیا گیا ہے جو کہ غیر قانونی اقدام ہے لہذا جاری ٹینڈر منسوخ کئے جائیں اور درخواست گزار کو ترقیاتی فنڈز جاری کرنے کے احکامات جاری کئے جائیں ۔