26-05-2017

پشاور ہائی کورٹ نے صوبائی حکومت سے صوبے کے سکولوں میں مہیا کئے گئے سہولیات کے حوالے سے چودہ جون تک تفصیلی رپورٹ طلب کر لی ہے ۔

جسٹس قیصر رشید اور جسٹس محمد غضنفر خان پر مشتمل دو رکنی بنچ نے ایک غیر سرکاری تنظیم کی جانب سے دائر رٹ پٹیشن کی سماعت کی ۔

دوران سماعت جسٹس قیصر رشید نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ تعلیم کے لئے ضروری ہے کہ سکولوں کاک نظام درست ہو لیکن اب بھی صوبے کے بیشتر سکولوں میں نہ تو طلباء کےلئے پینے کا صاف پانی موجود ہے اور نہ ہی دیگر بنیادی سہولیات ہیں۔

فاضل عدالت نے دائر رٹ پر صوبائی حکومت سےصوبہ کے تمام سرکاری سکولوں میں دیئے جانے والے سہولیات کی تفصیلات طلب کرتے ہوئے رٹ پٹیشن کی سماعت چودہ جون تک ملتوی کردی ۔