08-02-2017

پشاور ہائی کورٹ  نے عبدالولی خان یونیورسٹی کے لیکچرار کو پی ایچ ڈی کےلئے بغیر تنخواہ رخصت دینے کے احکامات کالعدم قرار دیتے ہوئے مکمل تنخواہ ادا کرنے کے احکامات جاری کردیئے ہیں ۔

جسٹس روح الاامین خان اور جسٹس لعل خان خٹک پر مشتمل دو رکنی بنچ نے شعبہ کیمسٹری عبدالولی خان یونیورسٹی کے لیکچرار امیر زادہ کی جانب سے دائر رٹ درخواست کی سماعت کی جس میں عدالت کو بتایا گیا کہ درخواست گزار نے چین میں پی ایچ ڈی کی جس کےلئے اس نے یونیورسٹی سے باقاعدہ رخصت لی تھی تاہم انہیں یہ رخصت تنخواہ کے بغیر دی گئی حالانکہ یہ تمام یونیورسٹیوں کی پالیسی ہے کہ پی ایچ ڈی کرنے والے لیکچرار ز کو مکمل تنخواہیں ادا کی جائیں گی لیکن درخواست گزار کو اس سے محروم رکھا گیا ہے ۔

عدالت نے دونوں جانب سے وکلاء کے دلائل مکمل ہونے پر رٹ پٹیشن منظور کر لی اور درخواست گزار کو تنخواہیں ادا کرنے کے احکامات جاری کردیئے ۔