08-06-2018

پشاورہائی کورٹ کے جسٹس قیصررشید اور جسٹس ناصرمحفوظ پرمشتمل دورکنی بنچ نے عبدالولی خان یونیورسٹی کے74ملازمین کی برطرفی کے احکامات معطل کرتے ہوئے یونیورسٹی انتظامیہ سے جواب طلب کرلیا ۔

دائر رٹ پٹیشن میں عدالت کوبتایاگیاکہ درخواست گذار عبدالولی خان یونیورسٹی میں کنٹریکٹ پرتعینات ہیں جنہیں تین سالہ کنٹریکٹ پرتعینات کیاگیاتھااوریہ کہاگیاکہ کنٹریکٹ کی مدت مکمل ہونے یانئے ملازمین کے بھرتی ہونے پرانہیں فارغ کردیاجائے گاتاہم نئے افراد بھرتی بھی نہیں ہوئے اورکنٹریکٹ میں مدت بھی ابھی باقی ہے اوردرخواست گزاروں کو فارغ کیاجارہا ہے لہذاانتظامیہ کوانہیں ملازمت سے برطرف کرنے کے احکامات کالعدم قرار دیا جائے ۔

فاضل عدالت نے جاری  حکم امتناعی  میں  توسیع کرتے ہوئے یونیورسٹی حکام سے جواب طلب کرلیا۔