23-06-2017

پشاور ہائی کورٹ کے جسٹس وقار احمد سیٹھ کی سربراہی میں قائم دو رکنی بنچ نے عدالتی احکامات کی تعمیل نہ کرنے پر ڈی جی ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کو نوٹس جاری کرکے چھبیس جولائی تک  جواب طلب کرلیا ہے ۔

دائرتوہین عدالت درخّاست کی سماعت کے دوران عدالت کوبتایا گیا کہ درخواست گزار تمباکو کاشتکار ہیں اور صوبائی حکومت نے تمباکو کے پتے کے علاوہ اس کی ڈنڈی پر بھی ٹوبیکو ڈویلپمنٹ سیس نافذ کر دیا ہے اور اس سے قبل پشاور ہائی کورٹ نے تمباکو کی ڈنڈی پر سیس ٹیکس کو کالعدم قرار دے چکی ہے تاہم ان عدالتی احکامات کے باوجود محکمہ ایکسائز  تمباکو کے پودے کی ڈنڈی پر سیس وصول کر رہی ہے جو کہ غیر قانونی اور توہین عدالت کے زمرے میں آتا ہے ۔