08-02-2017

پشاور ہائی کور ٹ نے چارسدہ روڑ پر واقع عیدگاہ میں دکانوں کی تعمیر کے خلاف دائر رٹ پر ادارہ تحفظ ماحولیات کو ہدایت کی ہے کہ وہ اس حوالے سے رپورٹ پیش کرے کہ آیا ان تعمیرات سے ماحولیاتی مسئلہ تو پیدا نہیں ہو گا۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس  یحیی آفریدی اورجسٹس یونس تہیم پر مشتمل دو رکنی بنچ نے دائر رٹ پٹیشن کی سماعت کی جس میں عدالت کوبتایا گیا کہ صوبائی حکومت نے عید گاہ پشاور میں دکانیں تعمیر کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور عید گاہ محکمہ اوقاف کی اراضی پر واقع ہے اور دکانوں کی تعمیر سے علاقے میں ماحولیاتی آلودگی میں اضافہ ہوگا لہذا دکانوں کی تعمیر کا فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے ۔

عدالت نے ابتدائی دلائل کے بعد محکمہ ادارہ تحفظ ماحولیات سے اس حوالے سے رپورٹ طلب کر لیا۔