31-05-2017

سپریم کورٹ میں فوجی عدالتوں سے سزا یافتہ ملزمان کی اپیلوں کی سماعت  کے دوران جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے ان  اپیلوں کی سماعت سے معذرت کرلی۔جسٹس آصف سعید کھوسہ کا کہنا تھا سپریم کورٹ کے تین رکنی بنچ کے  تینوں ججز نے فوجی عدالتوں کیخلاف مقدمے میں اختلافی نوٹ لکھا تھا، اختلافی نوٹ میں تینوں ججز نے فوجی عدالتوں کو آئین سے متصادم قرار دیا تھا۔ان کا کہنا تھا کہ اس وجہ سے ہم میں سے کوئی بھی یہ کیس سننا نہیں چاہے گا۔عدالت کا کہنا تھا وکیل متفرق درخواست دے کر اپیل نئے بینچ میں لگوانے کی استدعا کریں۔جس کے بعد سپریم کورٹ کے 3 رکنی بینچ نے ملزمان ندیم عباس، جہانگیر حیدر اور ذیشان کی اپیلیں چیف جسٹس پاکستان  کو بھجوا دیں۔