14-04-2018

قومی احتساب بیورو خیبر پختونخوا نے پی ڈی اے پشاور اور خیبر پختونخوا سمیت فاٹا کے متعدد محکموں میں کرپشن کے الزامات کی انکوائری کی منظوری دے دی ہے۔

کرپشن اور خرد برد کی منظوری قومی احتساب بیورو کے ریجنل بورڈ میٹنگ میں دی گئی جس کی صدارت ڈی جی نیب خیبر پختونخوا فرمان اللہ نے کی۔ اجلاس میں پشاور ڈویلپمنٹ اتھارٹی کے ریگی ماڈل ٹائون کی سڑکوں کی ناقص تعمیر، واٹر سپلائی اور سیوریج سسٹم میں غیر معیاری کام کرنے اورکروڑوں روپے کی مالی خرد برد پر تحقیقات کی منظور ی دے دی گئی ۔

مردان کے سمال انڈسٹریل ڈویلپمنٹ بورڈ میں منظور نظر افراد کو چھتیس پلاٹ غیر قانونی طورپرالاٹ کرنے کے خلاف تحقیقات کی منظوری دے دی ۔ اجلاس میں چارسدہ کے محکمہ ریونیو کے خلاف تنگی تحصیل میں بائیس کنال زمین خلاف قانون لیز پر دینے کی انکوائری کرنے کی بھی منظوری دی گئی ۔ مہمند ایجنسی میں دوائیوں اور ڈیلی دیجز ملازمین سمیت دیگر مدوں میں کروڑوں روپے کی خرد برد کرنے پر سابق ایجنسی سرجن ڈاکٹر زاکر حسین سمیت دیگر کے خلاف انکوائری ، جبکہ مردان میڈیکل کمپلیکس ری نیوایشن کے نام پر دو سو ملین روپے غیر قانونی خرد برد کرنے پر ہسپتال افسران سمیت دیگر کے خلاف تحقیقات کی منظوری بھی دے دی گئی۔