18-08-2017

قومی اسمبلی نے پبلک مفادات میں انکشاف کے بل کی کثرت رائے سے منظوری  دے دی ہے جس کے تحت سرکاری داروں میں بے قاعدگیوں، منصوبوں میں کمیشن اور کک بیکس لینے کی نشاندہی کرنیوالے سرکاری ملازمین کو تحفظ دیا جائے گا اور انہیں انتقام کا نشانہ نہیں بنایا جاسکے گا۔

دوسری جانب ایوان نے پاکستان تمباکو بورڈ آرڈیننس1967 میں ترمیم کا بل بھی منظور کرلیا ۔ ایوان میں انتخابات بل بھی پیش کردیا گیا جس پر بحث کے بعد غور ہوگا۔ اسکے علاوہ قومی اسمبلی  میں  وفاقی بینک برائے کوآپریٹوز کے قیام اورکوآپریٹو بینکنگ کے ضابطہ کا تنسیخی بل بھی پیش کیا گیا۔