30-03-2018

سپریم کورٹ  نے قومی میڈیا پر فحش مواد نشر کرنے اور یو ٹیوب کی بندش سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران فریقین کو اس نوعیت کی کسی بھی شکایت کی صورت میں پیمرا کی کونسل آف کمپلینٹ میں شکایات درج کروانے اور پیمرا کو اس پر 90 روز کے اندر اندر ایکشن لینے کی ہدایات کرتے ہوئے از خود نوٹس کیس نمٹا دیاہے۔

چیف جسٹس پاکستان جسٹس  میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں جسٹس عمر عطابندیال اور جسٹس اعجاز الاحسن پر مشتمل سپریم کورٹ کے تین رکنی بیچ نے متعد د درخواستوں کی سماعت کی۔

عدالت نے پیمرا کا اس نوعیت کی شکایات پر 90 روز کے اندر اندر ایکشن لینے کی ہدایات کرتے ہوئے از خود نوٹس کیس نمٹا دیا جبکہ درخواست گزاروں کو داد رسی نہ ملنے کی صورت میں توہین عدالت میں متعلقہ فورم سے رجوع کرنے کا مشورہ دیا ہے۔