18-04-2017

پشاور ہائی کورٹ نے وفاقی حکومت کی جانب سے لیویز فورس کے اہلکاروں کی ریٹائرمنٹ کےلئے وضع کردہ رولز معطل کرتے ہوئے وزارت داخلہ سے جواب طلب کر لیا ہے ۔

دائر رٹ درخواست میں عدالت کو بتایا گیا کہ درخواست گزار سمیت دیگر اورکزئی ایجنسی میں لیویز فورس میں صوبیدار ، نائب صوبیدار اور صوبیدار میجر کی پوسٹوں پر خدمات سر انجام دے رہے ہیں اور قبل از ریٹائرمنٹ پالیسی کے تحت درخواست گزار ساٹھ سالہ عمر یا سینتیس سالہ ملازمت کی بنیاد پر ریٹائر کئے جاتے تھے تاہم دو ہزار سولہ میں ان رولز میں ترمیم کی گئی اور نئے رولز کے تحت ان عہدوں پر تین سال ملازمت کرنے والے ملازمین ریٹائرڈ کر دیئے جائیں گے اور نئے رول نئے اور پرانے تمام ملازمین کےلئے یکساں لاگو کئے گئے ہیں جو کہ غیر آئینی اور غیر قانونی ہے کیونکہ نئے رولز صرف نئے ملازمین پر لاگو کرنے چاہئِے لہذا نئے رولز کو کالعدم قرار دیئے جائیں ۔