March 23, 2019

Khyber Pakhtunkhwa Judicial Academy, Peshawar
BROADCAST TIMING

Morning : 08:00AM to 11:00AM | Evening : 03:00PM to 07:00PM
Call Now: 091-9211654 | Email us: info@radiomeezan.pk

مجوزہ سول ریفارمز  سے متعلق خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی میں ایک روزہ  انٹریکٹیو سیشن کا انعقاد

10-01-2019

خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی پشاور میں مجوزہ سول ریفامز  سے متعلق ایک روزہ انٹریکٹیو سیشن کا انعقاد کیا گیا جس کی صدارت سابق جج پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی زاہد گیلانی اور ڈائریکٹر جنرل خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی فضل سبحان نے کی ۔ سیشن میں سابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن ججز   نیاز محمد خان ، بشیر خان سمیت ، احتساب عدالت کے موجودہ جج نوید احمد ، جج اینٹی کرپشن سید کمال شاہ ،  انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کے جج محمد بشیر ، خیبر پختونخوا بار کونسل ، پشاور ہائی کورٹ بار ، ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشنوں اور لاء ڈیپارٹمنٹ خیبر پختونخوا کے نمائندوں ،خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی کے ڈین فیکلٹی سہیل شیراز نور ثانی ، ڈائریکٹر ایڈمن ضیاء الرحمان اور ڈائریکٹر انسٹرکشنز سمیت دیگر نے شرکت کی ۔

ڈائریکٹر ریگولیشن پشاور ہائی کورٹ  ضیاء صدیقی نے سول ریفارمز  کے تحت مجوزہ ترامیم متعلق بریفنگ دیتے ہوئے شرکاء کو بتایا کہ وفاقی حکومت نے سول مقدمات کے جلد تصفیے اور عوام کو فوری اور سستے انصاف کی فراہمی کے سلسلہ میں لاء ریفارمز ٹاسک فورس بنائی اور اس سلسلہ میں صوبائی حکومت نے پشاور ہائی کور ٹ کو  سول ریفارمز کے سلسلہ میں مجوزہ ترامیم  سے متعلق سفارشات تیار کرنے کی درخواست کی جس پر پشاور ہائی کورٹ نے سول مجوزہ ترامیم کو  تیار کرنے کےلئے خیبر پختونخوا جوڈیشل اکیڈمی کو ٹاسک دیا ہے۔ ایک روزہ سیشن میں شرکاء نے کورٹ فیس ایکٹ ، ضابطہ دیوانی (سی پی سی ) اور ریگولیشن ایکٹ سمیت دیگر  میں تیار  کردہ مجوزہ ترامیم کا کلاز بائے کلاز مشاہدہ کیا اور اس ضمن میں سفارشات مرتب کی گئیں جسے پشاور ہائی کورٹ کے ذریعے صوبائی حکومت کو ارسال کی جائیں گی ۔

Related posts