12-05-2017

پشاور ہائی کور ٹ نے محکمہ تعلیم نوشہرہ سے انیس سو ننانوے سے اب تک سرپلس پول سے بھرتی ہونے والے چھ سو دس پی ایس ٹی اساتذہ کا ریکارڈ طلب کر لیا ہے ۔

جسٹس قیصر رشید اور جسٹس عبدالشکور پر مشتمل دو رکنی بنچ نے چھ پی ایس ٹی امیدواروں کی جانب سے دائر رٹ پٹیشن کی سماعت کی جس میں موقف اپنایا گیا کہ درخواست گزاروں کا تعلق ضلع نوشہرہ سے ہے اور انہوں نے حالیہ پی ایس ٹی اساتذہ کی پوسٹوں پر بھرتی کےلئے درخواستیں دی تھیں اور تعلیمی کوائف مکمل ہونے کے باوجود انہیں زائد العمر قرار دے کر نااہل قرار دیا گیا جبکہ محکمہ تعلیم نوشہرہ نے انیس سو ننانوے کے بعد سے پی ایس ٹی کی بھرتی کےلئے اشتہار ہی نہیں دیا ۔

عدالت نے اگلی پیشی پر تمام ریکارڈ عدالت میں پیش کرنے کے احکامات جاری کرکے سماعت ملتوی کردی ۔