21-03-2017

پشاور کی احتساب عدالت نے کروڑوں روپے مالیت کے غیر قانونی اثاثے بنانے کے الزام میں گرفتار محکمہ تعمیرات و مواصلات دیر بالا کے اہلکار فضل ہادی  کو مزید سات روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کی تحقیقاتی ٹیم کے حوالے کر دیا ہے ۔

نیب پراسیکیوٹر نے عدالت کو بتایا کہ ملزم پر اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے پانچ کروڑ روپے سے زائد مالیت کی غیر قانونی اثاثے بنانے کا الزام ہے جبکہ ملزم کا تعلق درمیانے درجے کے خاندان سے ہے جو مینگورہ سوات کا رہائشی ہے تاہم دوران ملازمت اس نے اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے کروڑوں روپے کے غیر قانونی اثاثے بنائے ہیں ملزم سے تفتیش ابھی مکمل نہیں ہوئی ہے اس لئے اسے مزید جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کیا جائے ۔ عدالت نے دلائل کے بعد نیب پراسیکیوٹر کی استدعا منظور کر لی اور ملزم کو مزید سات دنوں کےلئے جسمانی ریمانڈ پر نیب کی تحویل میں دے دیا ۔