19-01-2017

پشاور ہائی کورٹ نے محکمہ صحت چترال میں پیرا میڈیکس کی پوسٹوں پر بھرتیوں کے عمل میں ایک سالہ ڈپلومہ ہولڈرز کو شامل کرنے کے احکامات جاری کردیئے ہیں ۔

جسٹس وقار احمد سیٹھ اورجسٹس روح الاآمین خان پر مشتمل دو رکنی بنچ نےتیرہ امیدواروں کی جانب سے دائر رٹ پٹیشن کی سماعت کی جس میں عدالت کو بتایا گیا کہ محکمہ صحت خیبر پختونخٔا نے صوبے کے مختلف ہسپتالوں اور طبی مراکز کےلئے پیرا میڈیکس کی مختلف پوسٹیں مشتہر  کی تھیں جس کےلئے ضلع چترال سے درخواست گزاروں نے درخواستیں دیں تاہم ان کے ٹیسٹ کوالیفائی کرنے کے باوجود انہیں انٹرویو میں یہ کہہ کر مسترد کر دیا گیا کہ ان کا ڈپلومہ ایک سالہ ہے جبکہ اشتہار میں ایسا کوئی ذکر نہ تھا کہ ڈپلومہ کا دو سال کا ہونا چاہیئے لہذامحکمہ کے اس فیصلے کو کالعدم قرار دے کر درخواست گزاروں کو بھرتی کے عمل میں شامل کیاجائے ۔

عدالت نے دائر رٹ پٹیشن منظور کر لی اور درخواست گزاروں کو بھرتی کے عمل میں شامل کرنے کے احکامات جاری کردیئے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔