ہری پور کی انسداد دہشت گردی عدالت نے مردان کی عبدالولی خان یونیورسٹی میں تشدد کے بعد جاں بحق

ہونے والے طالب علم مشال خان قتل کیس میں 57 ملزمان پر فرد جرم عائد کر دیا ہے۔

کیس کی سماعت ہری پور سنٹرل جیل میں ہوئی۔ عدالت نے ملزمان پر فرد جرم عائد کر دی تاہم انہوں نے صحت جرم سے انکار کیا۔

عدالت نے کیس کی مزید سماعت کل تک کیلئے ملتوی کر دی۔

واضح رہے کہ رواں برس 13 اپریل کو مردان کی عبدالولی خان یونیورسٹی میں گستاخی کے الزام میں شعبہ ابلاغ عامہ کے 23 سالہ طالب علم مشعال خان کو تشدد کے بعد قتل کردیا گیا تھا۔

مشعال خان کے قتل کے الزام میں 57 ملزمان کو گرفتار کیا گیا تھا، جن پر آج فرد جرم عائد کی گئی۔