13-11-2017

وفاقی حکومت نے وزیر خزانہ اسحاق ڈار کی ملک میں عدم موجودگی کے باعث ان کی مشترکہ مفادات کونسل کی رکنیت ختم کردی اور ان کی جگہ وزیر داخلہ احسن اقبال کو مشترکہ مفادات کونسل کا رکن مقرر کیا گیا ہے۔ احسن اقبال کے پاس وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی کا بھی اضافہ چارج ہے۔وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے اسحاق ڈار کو ہٹانے کی سفارش کی تھی جس کی صدر مملکت نے منظوری دیدی ہے اور اس کا اطلاق بھی فوری طور پر ہوگا۔

وزیر داخلہ احسن اقبال اب اسحاق ڈار کی جگہ مشترکہ مفادات کونسل میں فیڈریشن کے رکن ہوں گے جس کا نوٹی فکیشن جاری کردیا گیا ہے۔

احسن اقبال کے بعد مشترکہ مفادات کونسل میں اب فیڈریشن کے ارکان میں وزیر بین الصوبائی رابطہ اور وزیر صنعت و پیداوار شامل ہیں۔

دوسری جانب حکومت نے پیپلزپارٹی کے مطالبے پر آج مشترکہ مفادات کونسل کا اجلاس طلب کررکھا ہے وزیراعظم کی زیر صدارت  ہو رہا ہے۔