31-03-2017

پشاور ہائی کورٹ نے عدالتی احکامات کے باوجود مفتی محمود فلائی اوور پشاور کی تعمیر سے متاثر ہونے والے دکانداروں کو تاحال متبادل جگہ فراہم نہ کرنے پر ضلع ناظم اور ڈپٹی کمشنر پشاور  کو آخری مہلت دیتے ہوئے جواب طلب کر لیا ہے جبکہ جواب جمع نہ کرنے کی صورت میں اگلی پیشی پر عدالت میں پیش ہونے کے احکامات جاری کردیئے ہیں ۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس عبدالشکور پر مشتمل دو رکنی بنچ نے دائر توہین عدالت درخواست کی سماعت کی جس میں عدالت کوبتایا گیا کہ دائر رٹ پر صوبائی حکومت نے مفتی محمود فلائی اوور پشاور کے متاثرہ دکانداروں کو متبادل جگہ فراہم کرنے کی یقین دہانی کرائی تھی لیکن اتنا عرصہ گزرنے کے باوجود متاثرہ دکانداروں کو تاحال متبادل جگہ فراہم نہیں کی گئی لہذا متعلقہ حکام کے خلاف توہین عدالت کی کاروائی عمل میں لائی جائے