19-05-2018

پشاورہائی کورٹ کی جسٹس مسرت ہلالی پر مشتمل سنگل بنچ  نے منشیات کے مقدمے میں دو سال سے جیل میں پڑے ملزم کوضمانت پررہا کرنے کے احکامات جاری کردئیے ہیں۔

استغاثہ کے مطابق ملزم محمدیاسر سکنہ اچینی بالا کوپولیس نے فروری2016ءکو رشکئی انٹرچینج کے قریب گرفتارکرکے اس کے قبضے سے 10کلوگرام چرس برآمد کی تھی جو ملزم نے گاڑی کے خفیہ خانوں میں چھپارکھی تھی اس موقع پرملزم کی وکیل نے عدالت کو بتایاکہ ملزم دو سال سے جیل میں ہے اورتاحال اس کیخلاف کسی قسم کے ٹھوس شواہد پیش نہیں کئے جاسکے ہیں جبکہ وہ ناکردہ جرم کی سزاکاٹ رہا ہے  لہذا اس کی ضمانت درخواست منظور کی جائے ۔

فاضل عدالت نے دلائل مکمل ہونے پرملزم کی درخواست ضمانت منظورکرلی اور اسے ضمانت پر رہا کرنے کے احکامات جاری کردیئے۔