01-06-2017

سپریم کورٹ نے نہال ہاشمی بیان کے ازخود نوٹس کیس کی سماعت 5 جون تک ملتوی کرتے ہوئے سابق سینیٹر نہال ہاشمی کو جواب جمع کرانے کے لیے توہین عدالت کا نوٹس جاری کردیا جبکہ اٹارنی جنرل پاکستان کو پراسیکیوٹرمقرر کردیا گیا ہے۔

نہال ہاشمی دھمکی آمیز بیان پرسپریم کورٹ کے ازخود نوٹس کیس کی سماعت جسٹس اعجازافضل خان  کی سربراہی میں سپریم کور ٹ کے تین رکنی بینچ نے کی، دوران سماعت معزز ججز نے متنازعہ بیان کو آمروں سے بھی بدتر رویہ قرار دیتے ہوئے سماعت 5 جون تک ملتوی کردی۔

سماعت کے دوران جسٹس شیخ عظمت سعید کا کہنا تھا کہ ایسی دھمکیاں دہشت گرد مافیا دیتا ہے، ہم نےآمروں کو بھی دیکھا ہے کسی آمر نے بھی میرے خاندان کو دھمکی نہیں دی ہے ۔