27-02-2017

وفاقی وزیر مذہبی امور سردار یوسف کی سیکرٹری بن کر لوگوں کو لوٹنے والی خاتون کو بارہ سال قید اور چوون لاکھ جرمانے کی سزا سنا دی گئی۔

استعاثہ کے مطابق تسنیم فاطمہ نامی خاتون نے خود کو وفاقی وزیر مذہبی امور سردار یوسف کی سیکرٹری ظاہر کر کے 54 لوگوں سے ایک کروڑ روپے سے زائد کی رقم ہتھیا لی۔ تسنیم فاطمہ لوگوں کو وزارت مذہبی امور کی عمارت میں بلاتی اور ویٹنگ روم میں ان سے ملاقات کرتی۔ جعلسازی پر ملزمہ کے خلاف مقدمہ 2014 میں دائر کیا گیا تھا۔