16-08-2017

پشاور ہائی کورٹ نے صوبائی حکومت کی جانب سے وکلاء کےلئے صحت کارڈ ز کے اجراء کی یقین دہانی کے باوجود تاحال کارڈ ز جاری نہ کرنے پر وزیر اعلی خیبر پختونخوا کی منظورشدہ سمری یا اعلامیہ تیس اگست تک عدالت میں پیش کرنے کے احکامات جاری کردیئے ہیں ۔

جسٹس اکرام اللہ خان اور جسٹس عبد الشکور پر مشتمل دو رکنی بنچ نے خورشید احمد ایڈوکیٹ کی جانب سے دائر توہین عدالت درخواست کی سماعت کی جس میں موقف اپنایا گیا کہ وکلاء کو صحت کارڈ کے اجراء کے حوالے سے یقین دہانی کرائی گئی تھی تاہم تاحال کارڈ ز کا اجراء نہیں کیا گیا ہے جو کہ توہین عدالت کے زمرے میں آتا ہے۔