22-02-2017

لاہور ہائی کورٹ نے اوگرا ، نیپرا، سمیت پانچ خود مختار اداروں کو وفاقی وزارتوں کے ماتحت کرنے کا نوٹی فیکیشن معطل کر دیا ہے ۔

چیف جسٹس لاہور ہائی کور ٹ نے دائر کیس کی سماعت کی جس میں عدالت کو بتایا گیا کہ وفاقی حکومت نے قانونی طریقہ کار کے برعکس نوٹی فیکیشن جاری کرتے ہوئے پانچ خود مختار اداروں اوگرا ، نیپرا، پی ٹی اے ، پاکستان ٹیلی کمیونی کیشن اتھارٹی اور فریکونسی ایلوکیشن بورڈ  کی خودمختار حیثیت ختم کر دی ہےحالانکہ ان پانچ خود مختار اداروں کو وزارتوں کے ماتحت کرنے سے قبل مشترکہ مفادات کونسل اور کابینہ کی منظوری حاصل نہیں کی گئی جبکہ اس کے بغیر جاری نوٹی فیکیشن کی کوئی قانونی حیثیت نہیں لہذا جاری نوٹی فیکیشن کو کالعدم قرار دیا جائے ۔

سرکاری وکیل نے موقف اپنایا کہ وزیر اعظم نے انتظامی اختیارکے تحت خودمختار اداروں کو وفاقی وزارتوں کے ماتحت کرنے کی ہدایت کی ۔ جس پر چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ  منظور علی شاہ نے ریمارکس دیئے کہ آئین اور قانو ن کی خلاف ورزی کی اجازت کسی کو بھی نہیں دے سکتے ، عدالتیں آئین و قانون کے تحت فیصلہ کرتی ہیں ۔

عدالتی حکم کے باوجود پیش نہ ہونے پر عدالت نے اٹارنی جنرل پاکستان  کو اگلی سماعت پر عدالت میں پیش ہونے کا حکم دیتے ہوئے سماعت ملتوی کر دی ۔