27-09-2017

پشاور ہائی کورٹ نے پاک ترک سکول حیات آباد کے اساتذہ اور عملے کی ملک بدری روکنے کےلئے دائر رٹ  پر وزارت داخلہ کو نوٹس جاری کرکے جواب طلب کرلیاہے۔

چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ جسٹس یحیی آفریدی اورجسٹس روح الاآمین خان پر مشتمل دو رکنی بنچ نے دائر رٹ درخواست کی سماعت کی جس میں موقف اپنایا گیا کہ درخواست گزاروں میں پاک ترک سکول کے اساتذہ اور دیگر عملہ شامل ہے جب ترکی میں فوجی بغاوت ناکام ہوئی تو ترک حکومت نے پاکستانی حکومت سے ان اساتذہ کو ملک بدر کرنے کا کہا ۔ تاہم اگردرخواست گزاروں کو ڈی پورٹ کیا گیا تو ترکی پہنچتے ہی انہیں سزا دی جائے گی حالانکہ یو این ایچ سی آر نے حکومت پاکستان کو ایک مراسلہ بھجوایا ہے کہ ان افراد کو بین الا اقوامی حیثیت حاصل ہے انہیں تنگ نہ کیا جائے کیونکہ ان کےلئے ایسا ملک دیکھا جا رہا ہے جہاں انہیں کوئی خطرہ نہ ہو لہذا فاضل عدالت سے استدعا ہے کہ درخواست گزاروں کی ملک بدری روکی جائے ۔