28-03-2018

پشاورہائی کورٹ نے پروفیسر ڈاکٹراحسان علی کی ریٹائرمنٹ کے اڑھائی سال گذرنے کے باوجود پنشن ادا نہ کرنے پر پشاور یونیورسٹی سے جواب طلب کرلیاہے عدالت عالیہ کے جسٹس روح الامین اور جسٹس سید افسرشاہ پرمشتمل دورکنی بنچ نے گذشتہ روز پروفیسرڈاکٹراحسان علی کی رٹ پرسماعت کی تو عدالت کو بتایاگیاکہ درخواست گذار اڑھائی سال قبل گریڈ22میں پشاوریونیورسٹی سے ریٹائرہوئے اورتاحال اسے پنشن کی ادائیگی نہیں کی گئی انہوں نے عدالت کو بتایاکہ پانچویں پیشی ہے اورجامعہ پشاورکاوکیل عدالت میں پیش نہیں ہورہا ہے جبکہ درخواست گذار کو معاشی طور پر مشکلات کاسامناہے جبکہ قانون کے مطابق جب کوئی بھی سرکاری ملازم ریٹائرہوجائے تو اسے پندرہ روز میں پنشن ملنی چاہئیے عدالت عالیہ کے فاضل بنچ نے پشاوریونیورسٹی کے رجسٹرار اوروائس چانسلرکوآخری مہلت دیتے ہوئے