15-09-2017

پشاور ہائی کورٹ نے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر نوشہرہ کو نوٹس جاری کرتے ہوئے چار اکتوبر کو سن کوٹہ میں بھرتی ہونے والے ایمپلائز کے سینارٹی لسٹ سمیت  طلب کرلیا ہے ۔

جسٹس روح الامین خان اور جسٹس غضنفر علی پر مشتمل دو رکنی بنچ نے دائر رٹ درخواست کی سماعت کی جس میں عدالت کوبتایا گیا کہ درخواست گزار نے والد کی ریٹائرمنٹ کے بعد سن کوٹہ پر بھرتی کےلئے درخواست دی لیکن ان کو سن کوٹہ پر بھرتی نہیں کیا گیا جو کہ غیر قانونی اقدام ہے لہذا درخواست گزار کو بھرتی کرنے کے احکامات جاری کئے جائیں ۔

عدالت نے ابتدائی سماعت کے بعد ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر نوشہرہ کو چار اکتوبر کو ریکارڈ سمیت طلب کرلیا ۔