03-05-2018

چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے تمام سرکاری ملازمین کو تنخواہوں کی ادائیگی کی تصدیق تک اپنی تنخواہ لینے سے ایک بار پھر انکار کر دیا۔

دوران سماعت چیف جسٹس پاکستان  نے سیکرٹری خزانہ سے استفسار کیا کہ کیا تمام ملازمین کو تنخواہ مل گئی؟ سیکرٹری خزانہ نے بتایا چھ لاکھ چھپن ہزار ملازمین کو تنخواہوں کی ادائیگیاں کر دی گئی ہیں، معاملہ کی مکمل تصدیق کے لئے تین دن کی مہلت دی جائے۔

چیف جسٹس نے سیکرٹری خزانہ کی استدعا منظور کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ ملک کے ملازمین کو پہلے تنخواہ ادا کریں، صدر اور وزیرِاعظم کو تنخواہیں دیدیں لیکن ملازمین کو مکمل ادائیگیاں ہونے تک چیف جسٹس کو تنخواہ نہ دی جائے، کیس کی مزید سماعت آئندہ ہفتے ہو گی۔