03-04-2017

سپریم کورٹ نے ملک بھر میں تحقیقات اور استعاثہ کے نظام میں بہتری نہ ہونے کا نوٹس لیتے ہوئے تمام صوبائی اور وفاقی پراسیکیوٹر جنرلز کو نوٹس جاری دیا ہے ۔ چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے پراسیکیوٹر جنرلز سے تحقیقات اور استعاثہ کے نظام میں بہتری نہ ہونے کے معاملے پر تحریری جواب بھی طلب کیا ہے ۔ چیف جسٹس نے رجسٹرار آفس کو معاملہ سماعت کےلئے مقرر کرنے کی ہدایت بھی کی ہے ۔

دوسری طرف سینئر وکلاء نے چیف جسٹس پاکستان کی جانب سے استعاثہ کے نظام میں خرابیوں کے حوالے سے لئے گئے از خود نوٹس کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ اس معاملہ میں سینئر وکلاء کی معاونت سے سفارشات تیار کرکے حکومت کو بھجوانا چاہیئں تاکہ استعاثہ کے نظام میں بہتری لائی جاسکے ۔