05-07-2017

کارگل جنگ کے ہیرو کپٹن کرنل شیر خان کا آج 18واں یوم شہادت منایا جا رہا ہے ۔

کرنل شیر خان نے 1999میں گلتیری کے مقام پر بھارتی فوج کا مورچوں پر قبضے کا خواب چکنا چور کیا اور شہادت کے رتبے پر فائز ہوئے ۔ ان کی بہادری پر پاک فوج کی جانب سے انہیں نشان حیدر عطا کیا گیا۔

وطن کے بہادر سپوت کرنل شیر خان کو پوری قوم سلام پیش کرتی ہے جنہوں نے وطن کیلئے جان کا نذرانہ پیش کیا ۔ پاکستان کی تاریخ شجاعت و بہادری کی داستانیں رقم کرنے والے سیکڑوں جوانوں کی داستانوں سے بھری پڑی ہے ۔ ان میں سے ایک نام کرنل شیرخان کا بھی ہے ، کرنل شیر خان شہید 1970 میں ضلع صوابی ایک گاؤں نواں کلی میں پیدا ہوئے ۔ ان کے والدین نے پاک فوج سے محبت میں ان کا نام کرنل شیر خان رکھا ۔

کرنل شیر خان نے 14 اکتوبر 1994 میں پاک فوج میں شمولیت اختیارکی تھی ۔ 1994 میں 90 لانگ کورس سے گریجوایشن مکمل کی ۔ کیپٹن کرنل شیر خان کی پہلی تعیناتی 27 ویں سندھ رجمنٹ کے ساتھ اوکاڑہ میں ہوئی ۔