28-09-2017

لاہور ہائی کورٹ نے عدلیہ مخالف بیان پر سابق صدر جنرل ریٹائرڈ پرویز مشرف کے خلاف کاروائی کےلئے انٹرا کورٹ اپیل مسترد کر دی ۔

درخواست گزار رانا اسد اللہ کی جانب سے دائر انٹرا کورٹ  اپیل میں موقف اپنایا گیا کہ سنگل  بنچ نے پرویز مشرف کے خلاف درخواست کو حقائق کے برعکس ناقابل سماعت قرار دے دیا کیونکہ سابق صدر پرویز مشرف نے عدلیہ مخالف بیان دیا جو توہین عدالت کے زمرے میں آتا ہے لہذا ان کے خلاف توہین عدالت کی کاروائی عمل میں لائی جائے ۔

دلائل کے بعد فاضل عدالت نے دائر انٹرا کورٹ اپیل مسترد کر دی اور سنگل بنچ کے فیصلے کو درست قرار دے دیا ۔